اعتراف___________از ثروت نجیب

💖 دلِ بیزار کو اب کوئی توقع ہی نہیں تم سے ! نہ خود سے ہے ـ ـ ـ ـ دل ٹوٹے یا عہد ٹوٹے’ یا بدبخت محبت کی ساری جدو جہد ٹوٹے میری بلا سے سب چھوٹے نہ چھوٹے بس تیرا دامن ! کہ اس دامن سے الفت ہے وہی الفت جو پروانہ کسی […]

Read More…

متاع حیات_______از نیل زہرا

اس بات کو چند روز ہی گزرے ہیں ۔ ایک ایسی بات جو بظاہر عمومی اہمیت کی حامل ہے ۔ مگر میرے تو ذہن پر جیسے نقش ہو کر رہ گئی ہے ۔ کبھی کبھی کوئی چھوٹا سا واقعہ نفسیاتی طور پر غیر معمولی اثر کر جاتا ہے ۔ یہاں بھی کچھ ایسا ہی ہے […]

Read More…

محجوبہ________ثروت نجیب

🌘 اک عرصہ ہوا چاند دیکھا نہیں چاندنی سے ملے مدتیں ہو گئیں شبِ سیاہ سے جا ملی بخت کی تیرگی کیا سجتی ہے اب بھی آسماں کی تاروں سے جبیں؟ کچھ تو کہو میرے صیاد جی !!!! اس قفس سے باہر کیا دنیا اب بھی ہے حسیں کیا سورج اگتا ہے اب بھی کنواری […]

Read More…

عورت اور منافقت___ از ابصار فاطمہ

. پہلے تو ہمیں یہ واضح ہونا ضروری ہے کہ منافقت کیا ہے. منافقت کا رویہ ہمیشہ منفی معنی میں استعمال ہوتا ہے اور مصلحت پسندی یا مصالحت پسندی کو منافقت نہ کہنا چاہیے نہ سمجھنا چاہیے. کچھ عرصے پہلے ایک دلچسپ اوپن ڈسکشن ہوئی میرے گروپ میں کہ ہم جھوٹ کیوں بولتے ہیں اور […]

Read More…

خواتین منافق ہیں!از اُمِ کلثوم

ہم اپنوں بیگانوں کے ڈر سے گونگی بہری بات کہیں داغِ جگر کو لالۂ رنگیں اشکوں کو برسات کہیں سورج کو سورج نہ پکاریں دن کو اجلی رات کہیں جی ہاں بالکل درست خواتین واقعی بہت منافق ہوتی ہیں رات کو شوہر سے مار کھانے کے بعد صبح کمرے سے نکلنے سے پہلے نہا دھو […]

Read More…