“کیموفلاژ گودر “___________ از ثروت نجیب ( افغانستان)

گودر پہ وہ اسے دیکھتے ہی ٹھٹھک گئی ـ اور بڑبڑائی “ایک خارجی اجبنی یہاں کیسے؟ لگتا ہے موت کھینچ … More

“کاغذ قلم کی کہانی”_______از ثروت نجیب

دیوار پہ روغن ہو جاتے ہیں مگر ایک بار بچے کے دماغ میں خوف بیٹھ گیا تو وہ دیوار تو کیا  سفید کاغذ کی دہشت سے بھی کبھی نکل ہی نہیں پائے گا

محجوبہ________ثروت نجیب

🌘 اک عرصہ ہوا چاند دیکھا نہیں چاندنی سے ملے مدتیں ہو گئیں شبِ سیاہ سے جا ملی بخت کی … More