محجوب_________از ثروت نجیب

خود سے پرے ‘ خدا سے جدا ‘ رہتا ہوں پریشاں اُس گھر کے لیے ـــ
میں دن بھر جس میں رہتا ہی نہیں !!!!
شام ڈھلے ‘ شب کے سایے تلے ‘ میرا خواب پلے ـــ
جس میں ہے روشنی نئی نسل کے لیے ـ ـ ـ ـ

بدھائ صوفیہ لاگ ڈاٹ بلاگ🌷______از ثروت نجیب

🌹سالروز اش تبریک سفر اش جاویدان چرغ ہونا بھی اپنی دانست میں قربانی ہے کیونکہ چراغ تلے ہمیشہ اندھیرا ہوتا … More