سفر حجاز________پارٹ 3

زبان پر یہ کس کا نام آیا: روضہ رسول سے اٹھ کر واپس ہوٹل کی طرف لوٹنا اک کڑا مرحلہ تھا مگر ستم یہ تھا کہ دن بھر کے سفر کی تھکاوٹ تھی ، تہجد کی نماز مسجد نبوی میں ادا کرنے کی شدید چاہت تھی تو اسی دوپہر عمرے کی روانگی بھی تھی ۔گھڑی […]

Read More…

سفر حجاذ______از صوفیہ کاشف

جھکاؤ نظریں،بچھاو پلکیں مغرب کے زرا بعد ہوٹل پہنچے تو ریسیپشن سے ہی معلوم ہوا کہ عشاء کے بعد روضہ رسول پر خواتین کی حاضری کے اوقات ہیں۔ عشاء میں ابھی کچھ وقت تھا۔سو نہانے دھونے اور کھانا کھانے کا کچھ وقت میسر تھا۔عشاء کی اذان ہوتے ہی جب ریسٹورنٹ بند ہونے لگا اور ہر […]

Read More…

سفر حجاز_________از صوفیہ کاشف

1_زہے مقدر______ کیا واقعی دو ہفتے بعد میری ذندگی بدلنے والی ہے؟اس کتاب کا وہ صفحہ الٹنے والا ہے جس کی راہ میں ہزارہا قسم کے مسائل الجھے ہوئے تھے۔یہ سوال میں نے اپنے جرنل پر تب لکھا جب مجھے شکے تھا کہ میاں صاحب کا ارادہ بدلے گا،ویزہ نہیں لگے گا،چھٹی کہاں ملے گی،بچوں […]

Read More…

کمی

“اب یہ نوکری کیوں؟” “میں اپنے جینے کا ثبوت چاہتی ہوں۔” “جینے کا ثبوت گھر کے کام کاج سے نہیں ملتا؟” “نہیں______ان سے تو مجھے اپنی موت کا یقین ہو جاتا ہے!” نور نے بہت کوشش کی نوکری ڈھونڈنے کی،مگر نہ ملی!اسے مصروفیت چاہیے تھی۔کوی ایسی بے ہنگم مصروفیت جو اسکی فرصتوں کو غرق کر […]

Read More…

جب تک۔۔

دھڑکن میں اک سر ہے باقی💖 جب تک روح ہے محو رقص اور پلکوں کی چلمن پر روشنی ابھی تک زندہ ہے سوچ کی بارہ دریؤں میں بجلی ابھی بھی باقی ہے رات ڈھلتے سمے سے ہی پلکوں کی بھاری چلمن پر زہریلے کانٹے ظاہر ہونگے نیند بھری آنکھیں ساکن ہوں گی دل بے چین […]

Read More…