تعلیم و تربیت______مکالمہ از عمر

“میں نے بچوں کے لئے رسالہ خریدا ہے۔

کونسا؟

تعلیم و تربیت۔

بہت اچھا قدم۔ اس سے پڑھائی کی عادت بھی بنے گی اور اصل بات تک رسائی بھی ہو گی۔

اصل بات؟

اصل بات یعنی تربیت۔ اچھے لوگ ، ماحول، دوست اور کتابیں تربیت کرتے ہیں۔

اور کوئی بُری چیز بھی تربیت کرتی ہے؟

ہاں۔ بُرے حالات۔ برے حالات سب سے اچھے استادوں میں سے ہیں۔

ہاہا۔ خوب۔

اور تربیت ہی وہ چیز ہے جو تعلیم کو رُخ دیتی ہے۔

وہ کیسے؟

تعلیم جاننے کا نام ہے۔ تربیت ماننے کا۔

پر جاننا بھی تو اہم ہے۔

ضرور۔ جاننا اتنا ہی اہم ہے ، جتنا ضروری ہو۔ اور کِتنا ضروری ہے ، یہ تربیت بتاتی ہے۔ ضرورت سے زیادہ جاننا بھوک سے زیادہ کھانے کے مترادف ہے۔

اچھا ایک بات بتائیں”۔

پوچھیئے۔

تربیت کا پتا کیسے چلتا ہے؟

تربیت کا پتا چلانا ہو ، تو مشکل حالات میں انسان کا رویہ دیکھ لیں۔ رویہ ، انسانوں کے ساتھ ، حالات کے ساتھ ، چیزوں کے ساتھ ۔ سٹریس ، نامساعد حالات اور مصیبت کا وقت دراصل انسان کی تربیت ہی تو سامنے لاتا ہے“.

______________

تحریر:عمر الیاس

Curtsy:

https://wp.me/p6oUSh-6Ec

کور ڈیزائن و فوٹو گرافی:صوفیہ کاشف

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out /  Change )

Google photo

You are commenting using your Google account. Log Out /  Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out /  Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out /  Change )

Connecting to %s

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.