” کتابوں کا احتجاج “

از ثروت نجیب ” کتابوں کا احتجاج ” آج کتابوں کا عالمی دن ہے کتابیں ناقدری کا کتبہ اٹھائے افسردگی سے شیشوں سے جھانکتی کتب خانوں کی مقفل الماروں میں دھرنا دے رہی ہیں قلم کی سیاہی اوراق سے بہہ کر کتابوں کا ماتمی مقدر بن گئی ہے نصاب پہ اکتفا کرنے والے اپنی ادھوری […]

Read More…