“ہاں میں زینب ہوں “۔۔۔۔۔۔از نوشین قمر

ہاں میں زینب ہوں اب کی بار اک ایسی کربلا کا سامنا ہے مجهے جہاں یزیدیت بهی شرمائے جہاں ابلیسیت بهی سر جکهائے جہاں جاہلیت اور سفاکیت کو بهی اپنے ہونے پہ ترس آئے جہاں اشکوں کی بهی آہیں نکلیں جہاں لفظ بهی دم توڑ جائیں جہاں جذبے بهی پیاسے ہیں بے ضمیری بهی دور […]

Read More…

ملامت ،،،،،،،،از ثروت نجیب

دائرے میں.بیٹھی لڑکیاں دف بجا بجا کر بابولالے گا رہیں تھیں ـ دلہن جاؤ تمھارے آگے خیر درپیش ہو ــــ وای وای بابولاله اللہ دلہن جا رہی ہے وای وای ـ میں اعلیٰ نسل کی گھوڑی دوں صدقے میں گر تیرے سر میں درد کبھی درپیش ہو ـ وای وای ـــ وای اللہ وای وای […]

Read More…