یاد ہے تم کو!!!

یاد ہے تم کو مجھے تم تتلی کہتے تھے رانی .شہزادی کہتے نہ حائل تھا کچھ درمیاں ہمارے میری پکار تجھے کھینچ نہ لائی تھی یاد ہے تم کو اپنی تتلی اپنی رانی خود ہی گھائل کر بیٹھے مصروفیت آڑے آئی اک دوجے کو بھلا بیٹھے ہاں یاد ہے مجھ کو , میرے ہاتھوں کو […]

Read More…